ریڈ کریسنٹ کا سیکرٹری جنرل کشمیری دوشیزہ کے الزام قتل میں گرفتار

اسلام آباد(خصوصی نیوز رپورٹر ) انجمن ہلال احمر پاکستان کے سیکرٹری جنرل خالد بن مجید اپنے ہی ادارہ کی ایک دوشیزہ کے اپنی زندگی کا خاتمہ کرنے کےکیس میں گرفتار ہوگئے،غیر مستند اطلاعات کیمطابق خالد بن مجید کا ہلال احمر کی ملازمہ کائنات طارق سکنہ تھوراڑ پونچھ آزادکشمیر کیساتھ مراسم تھے ،اور لڑکی شادی کرنا چاہتی تھی ،لیکن گزشتہ روز طارق بن مجید کی طرف سے شادی سے انکار پہ دوشیزہ کائنات نے زہریلی گولیاں کھالیں، انکو فوری طور ہسپتال منتقل کیا گیا ،پولیس کو بیان ریکارڈ کرانے کے بعد کائنات چل بسی،پولیس نے خالد بن مجید کو گرفتارکرکے انکا موبائل قبضہ میں لے لیا،ذرائع کیمطابق خالد بن مجید صلح کی کوششیں کررہے ہیں لیکن متوفئہ کی فیملی انکاری ہے ،ادھر بتایا گیا ہے کہ ہلال احمر کی ملازمہ کائنات طارق کی ڈیڈ باڈی کا پمز میں پوسٹ مارٹم ہوگیاہے ،والدطارق اور رشتہ دار اقارب ہسپتال پہنچ چکے تھے۔ایف ائی ار تھانہ ائی نائن میں درج کر لی گئی ہے۔ ادارہ ہلال احمر کے زمہ داران نے انکشافات ظاہر کر دیے کہ لڑکی نے افس میں کل شام کو کوئی زہریلی چیز کھا لی طبعیت غیر ہونے پر سٹاف نے ہسپتال پہنچایا۔ تاہم وہجانبر نہ ہو سکی ،دوشیزہ کائنات کا تعلق تھوراڑ نڑھ سے تھا، وہ سٹوڈنٹ بھی تھی۔ابتدائی رپورٹ۔ کے مطابق پونچھ تحصیل تھوراڑ نڑھ سے تعلق رکھنے والی جواں سالہ کائنات۔ طارق جو اسلام آباد میں زیر تعلیم تھی اور ایک این جی اوہلال احمر میں ملازمت کرتی تھی اور ہاسٹل میں رہائش پذیر تھی، رات اسلام اباد میں اسکی موت واقع ہونے کی اطلاعات ہیں ،ذرئع سے معلوم ہوا کہ اکیس نومبرکو کائنات نے سٹوڈنٹ اکاونٹ نہ ہونےکی وجہ سے اپنے ادارے کی مشاورت سے عسکری بنک کےزریعہ سے اپنے بھائی اسامہ طارق سے ساڑھے چار لاکھ منگوائے جو کہ کسی کےزاتی بنک اکاونٹ میں ائے ہیں۔ جبکہ دو روز گزرنے کے بعد اج رات کو کائنات کی موت کی خبر نے سب کو حیران کر ڈالا۔ عوام اور خاندان میں سخت تشویش پائی جانے لگی۔ مقدمہ کے اندراج کے بعد تفتیش ہومی سائیڈ یونٹ کے سپرد کر دی گئی ہے۔ نڑ تھوراڑ ۔پونچھ آزاد کشمیر سے تعلق رکھنے والے مقتولہ کے والد محمد طارق نے پولیس کو بتایاکہ انجمن ہلال احمر کے جنرل سیکرٹری خالد بن ولید نے میری بیٹی کائنات طارق سے حفیہ نکاح کر رکھا تھا۔ خالد بن ولید پہلے سے شادی شدہ اور 4 بچوں کا باپ ہے میری بیٹی کی تنخواہ 65 ہزار روپے تھی۔جس میں سے وہ ہر ماہ 25 ہزار روپے لیتا اور اپنے پاس رکھتا۔ دونوں کے درمیان کئی مرتبہ لڑائی بھی ہوئی تھی اور کائنات ہمیشہ نکاح کو سب کے سامنے لانا چاہتی تھی جس پر خالد بن ولید جھگڑا کرتا تھا ۔گزشتہ روز بھی اسی معاملے پر دونوں میں جھگڑا ہوا۔جس کے بعد میری بیٹی مردہ حالت میں پائی گئی۔خالد بن ولید نے کائنات کو زہر دے کر قتل کیا ہے۔ پولیس نے تحقیقات شروع کر دی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں