ن لیگ حکومت جے کے پی پی کی مقروض ہے، نبیلہ ارشاد ایڈووکیٹ

اسلام آباد( نیل فیری رپورٹ) جموں کشمیر پیپلزپارٹی کی سابق مرکزی سیکرٹری جنرل نبیلہ ارشاد ایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ سردار خالد ابراہیم خان ریاست جموں و کشمیر کے اندر پاکستانیت اور ریاستی تشخص کی بڑی علامت تھے۔ آزاد کشمیر میں سردار خالد ابراہیم کی منفرد سوچ کی وجہ سے ہر کوئی ان کی عزت کرتا ہے۔ انہوں نے ایسی وراثت چھوڑی ہے جس پر پورا کشمیر فخر کر سکتا ہے ان کی وفات سے آزاد کشمیر ایک جرات مند سیاستدان سے محروم ہو گیا ، آخری وقت تک انہوں نے جمہوریت، میرٹ، قانون اور انصاف کی بالادستی کی جدوجہد جاری رکھی۔سردار خالد ابراہیم جس مشن پر چل رہے تھے اس کو آگے بڑھائیں گے، یہ مشن غازی ملت کا مشن ہے۔ مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی طرف سے نہتے شہریوں کو شہید کرنے کا اقوام متحدہ اورعالمی انصاف کے اداروں انسانی حقوق کی تنظیموں کونوٹس لیناچاہئے ، ہندوستان کشمیر میں جنگی جرائم کو مرتکب ہو رہا ہے ۔ اقوام عالم مقبوضہ کشمیر میں انسانیت سوز مظالم بند کروانے میں اپنا کردار ادا کرے۔راولاکوٹ ضمنی الیکشن میں حسن ابراہیم کی کامیابی یقینی ہے ، ن لیگ جموں کشمیر پیپلزپارٹی کی مقروض ہے ۔ ان خیالات کا ااظہار انہوں نے روزنامہ نیل فیری کو خصوصی انٹرویو میں کیا ۔ نبیلہ ارشاد ایڈووکیٹ نے کہا کہ ن لیگ نے 2016 کے الیکشن میں پونچھ اور مظفرآباد ڈویژن میں جموں کشمیر پیپلز پارٹی کی حمایت سے 8 نشتوں پر کامیابی حاصل کی تھی ۔اورہماری انتخابی اتحاد کی وجہ سے حکومت سازی میں کامیاب ہوئی ۔ انہوں نے کہا کہ جنرل الیکشن میں ن لیگ راولاکوٹ کے حلقہ میں سردار ابراہیم کی حمایت نہ بھی کرتی تب بھی ہماری قائد کی جیت یقینی تھی ۔ انہوں نے کہا کہ سیاست میں جو اعلیٰ روایات سردار خالد ابراہیم مرحوم چھوڑ کر گئے ہیں ان پر عمل پیر ا ہونا کسی دوسری سیاسی جماعت کے بس کی بات نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم کسی دوسری جماعت کو پابند نہیں کر سکتے تھے کہ وہ سردار حسن ابراہیم کے مقابلے میں الیکشن نہ لڑے ۔ جماعت اسلامی ، پی ٹی آئی ، مسلم کانفرنس نے ضمنی الیکشن میں اپنا امیدوار کھڑ ا نہ کرکے بڑے پن کا مظاہرہ کیا ہے جس پر ہم ان جماعتوں کے قائدین کے شکر گزار ہیں ۔ نبیلہ ارشاد ایڈووکیٹ نے کہا کہ حلقہ 3پونچھ راولاکوٹ کے عوام غیور ہیں وہ خالد ابراہیم خان مرحوم کے مینڈیٹ کا تحفظ یقینی بنائیں گے اور سردار حسن ابراہیم خان کو بھاری اکثریت سے کامیاب کریں گے ۔ انہوں نے کہا کہ بانی آزادکشمیر غازی ملت سردار محمد ابراہیم خان کے خاندان کا سیاسی کردار تاریخی ہے ، جس کو نظرانداز نہیں کیا جاسکتا۔جموں کشمیر پیپلزپارٹی کے پارلیمانی بورڈ نے ضمنی الیکشن میں پارٹی درخواستیں طلب کیں حسن ابراہیم کے علاوہ پارلیمانی بورڈ کو کوئی دوسری درخواست موصول نہیں ہوئی ۔انہیں پارلیمانی بورڈ نے ٹکٹ جاری کیا ہے ۔ نبیلہ ارشاد نے کہا کہ سردار خالد ابراہیم کی اچانک وفات کے بعد کارکنان صدمے سے دوچار ہیں لیکن ان مشکل حالات میں بھی بھرپور الیکشن مہم جاری ہے ۔عوام میں ہمددری کا ووٹ بھی ہے ۔ن لیگ کی طرف سے امیدوار نامزد ہونے سے ہماری پارٹی کو کوئی فرق نہیں پڑے گا ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت آزادکشمیر حلقہ میں پری پول دھاندلی کی مرتکب ہو رہی ہے ، عوام کو سیکمیوں کی لالچ دیکر ووٹ مانگے جا رہے ہیں ،انہوں نے کہا ہماری پارٹی کے ضلعی صدر سردار سیاب شریف ان بے ضابطگیوں کو الیکشن کمیشن کے نوٹس میں لائیں گے ۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ جموں کشمیر پیپلز پارٹی آزادکشمیر کی واحد سیاسی جماعت ہے جس نے خواتین کو فیصلہ سازی میں شامل کیا ہے ،میں پارٹی کے کلیدی عہدوں پر رہی پارٹی میں ہمیشہ میری رائے کو مقدم سمجھا گیا ۔ انہوں نے کہا کہ حلقہ کی خواتین بھی اپنے ضمیر کا فیصلہ جے کے پی پی کے امیدوار کے حق میں کریں گے ۔ انہوں نے کہ ہم قانون انصاف کی بالادستی ، اداروں کے استحکام کیلئے سردار خالد ابراہیم خان کے ادھورے مشن کو جاری ساری رکھیں گے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں