میرپور، سانحہ چکسواری شادی ہال کی تحقیقات کیلئے 8 رُکنی کمیٹی قائم، دیگر تفصیلات اس خبر میں۔

میرپور (نمائندہ نیل فیری) ڈپٹی کمشنر راجہ طاہر ممتاز خان نے کہاکہ 17 جولائی کو دن 10:45 بجے کے قریب چکسواری روپیال میرج ہا ل کی اچانک عمارت زمین میں منہدم ہوگئی جس کے نتیجہ میں 23 افراد ملبے تلے دب گے۔ اس سانحہ کی تحقیقات کے لیے آٹھ رکنی کمیٹی قائم کردی گئی ہے جوایک ہفتہ کے اندر اپنی رپورٹ حکومت کوپیش کرے گی۔

ان خیالات کااظہار انھوں نے میڈیانمائندگان سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ایس ایس پی میرپورراجہ عرفان سلیم اور میڈیانمائندگان بھی موجود تھے۔

ڈپٹی کمشنرنے بتایاکہ سانحہ چکسواری کی اطلاع ملتے ہی فوری طورپر ضلعی انتظامیہ کی طرف سے ریسکیو آپریشن شروع کیا گیا۔ یہ آپریشن 19 جولائی کی شام کو ختم کیا گیا جس کے نتیجہ میں 20 زخمی افراد کو زندہ نکال لیا گیا اور 3 افراد کی اموات ہوئی۔

اس سانحہ میں میرج ہال کی پانچ منزلہ عمارت لمحوں میں زمین بوس ہو گئی جس سے اہل علاقہ /میرپور کے شہری خوف و ہراس کا شکار ہیں اور سانحہ کی وجہ سے یہ بات شدت سے محسوس کی جا رہی ہے کہ روپیال میرج ہال چکسواری کے زمین بوس ہونے کی وجوہات کا پتہ لگایا جائے تاکہ مستقبل میں ایسے حادثات/واقعات کی روک تھام ممکن ہو سکے۔

اس ساری صورتحال کے تناظر میں روپیال میرج ہال چکسواری کی عمارت کے گرنے کی وجوہات جاننے کیلئے حکومت آزادکشمیر کی ہدایت پر Structural انجینئر و ناظم تعمیرات عامہ بلڈنگ تنویر احمدقریشی کی سربراہی میں 8 رکنی ایک کمیٹی تشکیل دی گئی ہے جس میں مہتم عمارات (PPH) میرپور (سیکرٹری) اور ممبران میں اسسٹنٹ کمشنرمیرپور، اسسٹنٹ ڈائریکٹر شہری دفاع، اسسٹنٹ ڈائریکٹر صنعت و حرفت، آئی ٹی ایکسپرٹ میرپور، Soil Testingّّّّ ایکسپرٹ شامل ہیں۔

کمیٹی TORs کی روشنی میں مفصل تحقیقات کرتے ہوئے رپورٹ اندر ایک ہفتہ پیش کرے گی۔ TORs میں کیا بلڈنگ Structural Failure کی وجہ سے گری؟ کیا بلڈنگ Fracking of Land کی وجہ سے گری؟ کیا بلڈنگ کے original پلان میں کوئی alteration کی گئی تھی جس کی وجہ سے بلڈنگ collapse ہوئی؟ اور کیا alteration پلان سے پہلے Structural Engineer سے کنسلٹ کیا گیا تھا؟ کیا بلڈنگ گرنے کی وجہ کوئی اور تھی؟

کمیٹی اس بارے میں رپورٹ پیش کرنے کے علاوہ اقدامات /سفارشات بھی تجویز کرے گی کہ ضلع میرپور میں دیگر بڑی بلڈنگ کو کس طرح محفوظ بنایا جا سکتا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں